Sayings of the Messenger

 

‏‏بِسْمِ اللهِ الرَّحْمَنُ الرَّحِيم

In the Name of Allah, the Most Gracious, the Most Merciful

شروع ساتھ نام اللہ کےجو بہت رحم والا مہربان ہے۔

وَقَالَ مُجَاهِدٌ ‏{‏غَاسِقٍ‏}‏ اللَّيْلُ‏.‏ ‏{‏إِذَا وَقَبَ‏}‏ غُرُوبُ الشَّمْسِ يُقَالُ أَبْيَنُ مِنْ فَرَقِ وَفَلَقِ الصُّبْحِ‏.‏ ‏{‏وَقَبَ‏}‏ إِذَا دَخَلَ فِي كُلِّ شَىْءٍ وَأَظْلَمَ‏.‏

اور مجاہد نے کہا فَلَق سے صبح اور غَاسِق سے رات مراد ہے۔ اِذَا وَ قَب جب سورج ڈوب جائے۔ فَرَقٍ اور فَلَقٍ کے ایک معنی ہیں۔ کہتے ہیں یہ بات فرق صبح یا فلق صبح سے زیادہ روشن ہے۔عرب لوگ وَقَبَ اس وقت کو کہتے ہیں جب کوئی چیز بالکل کسی چیز میں گھس جائے اور اندھیرا ہو جائے۔

حَدَّثَنَا قُتَيْبَةُ بْنُ سَعِيدٍ، حَدَّثَنَا سُفْيَانُ، عَنْ عَاصِمٍ، وَعَبْدَةَ، عَنْ زِرِّ بْنِ حُبَيْشٍ، قَالَ سَأَلْتُ أُبَىَّ بْنَ كَعْبٍ عَنِ الْمُعَوِّذَتَيْنِ، فَقَالَ سَأَلْتُ رَسُولَ اللَّهِ صلى الله عليه وسلم فَقَالَ قِيلَ لِي فَقُلْتُ فَنَحْنُ نَقُولُ كَمَا قَالَ رَسُولُ اللَّهِ صلى الله عليه وسلم‏.‏

Narrated By Zirr bin Hubaish : I asked Ubai bin Ka'b regarding the two Muwwidhat (Surats of taking refuge with Allah). He said, "I asked the Prophet about them, He said, 'These two Surats have been recited to me and I have recited them (and are present in the Qur'an).' So, we say as Allah's Apostle said (i.e., they are part of the Qur'an"

ہم سے قتیبہ بن سعید نے بیان کیا، کہا ہم سے سفیان بن عیینہ نے، انہوں نے عاصم اور عبدہ بن ابی لبابہ سے، دونوں نے زر بن حبیش سے، انہوں نے کہا میں نے اُبی بن کعبؓ سے معوذتین (سورۃ الفلق اور الناس) کو پوچھا کیا یہ دونوں سورتیں قرآن میں داخل ہیں۔ انہوں نے کہا میں نے رسول اللہﷺ سے پوچھا آپؐ نے فرمایا جبریلؑ کی زبان پر مجھ کوحکم ہوایوں کہہ( قُل اَعُوذُ بِرَبِّکَ الفَلَق اور قُل اَعُوذُ بِرَبِّکَ النَّاس الخ) ہم وحہ کہتے ہیں جو رسول اللہﷺ نے فرمایا۔